قومی

پنجاب پولیس کےاہلکاروں نے سفاکی کی ایک اور داستان رقم کردی

پنجاب پولیس کےاہلکاروں نے سفاکی کی ایک اور داستان رقم کردی۔نو سالہ بچے کوموبائل چوری کےشبہ میں حراست میں لیا،،تو مبینہ طورپراس کےجسم کو استری اور ہیٹر سےداغ دیا۔
کم سن بچہ احمدلاہور میں صدر ڈویژن کےعلاقے شیرشاہ کالونی کارہائشی ہے۔احمد کےمطابق اسےایک نوجوان والد سے ملانے کا جھانسا دیکر موبائل شاپ پہ لایا۔جہاں سےوہ ایک موبائل فون گھردکھانے کے بہانےلےگیا۔نوجوان واپس نہ آیا تو دکاندار نے احمدکوپولیس کے حوالے کردیاجہاں اسے بہیمانہ تشدد کانشانہ بنایاگیا۔ واقعہ کانوٹس لیتےہوئےوزیراعلیٰ پنجاب نے بچےکے علاج معالجے اورواقعہ میں ملوث اہلکاروں کےخلاف کارروائی کی ہدایت کردی ہے ۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers