بین الاقوامیقومی

مہاتیر محمد 3 روزہ دورے کے بعد وطن واپس چلے گئے

ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد تین روزہ دورہ مکمل کر کے وطن واپس روانہ ہو گئے۔ ان کے دورے کے دوران پاکستان اور ملائشیا میں سرمایہ کاری اور باہمی تجارت کے بڑے معاہدے طے پاگئے۔ ملائیشیا کے وزیراعظم نے پاکستان میں گاڑیوں کا پلانٹ لگانے کا اعلان بھی کیا۔
جدید ملائیشیا کے بانی ڈاکٹر مہاتیر محمد کا دورہ پاکستان کئی لحاظ سے یادگار رہا۔ اپنا تین روزہ دورہ مکمل کر کے جب وہ وطن روانہ ہوئے تو انہیں پرتپاک انداز سے رخصت کیا گیا.اپنے دورے کے دوران ڈاکٹر مہاتیر محمد دونوں ملکوں کے درمیان دوستی کا رشتہ مزید مضبوط کر گئے. پاکستان پر سرمایہ کاری کے نئے دروازے بھی کھول گئے.
ملائیشیا کے وزیراعظم مہاتیر محمد اکیس مارچ 2019 کو پاکستان پہنچے تھے۔ وزیراعظم ہاؤس میں عمران خان اور ڈاکٹر مہاتیر محمد کے درمیان ون آن ون ملاقات ہوئی۔ جس میں دفاع، تعلیم، انفراسٹرکچر سمیت دیگر شعبوں میں تعاون بڑھانے پر اتفاق کیا گیا. خاص مہمان کو دورے کے دوران اعزاز بھی خاص دیا گیا۔ صدر مملکت عارف علوی نے ملائیشیا کے وزیر اعظم مہاتیر محمد کو پاکستان کے سب سے بڑے سول اعزاز سے نوازا۔
اسلام آباد میں پاکستان ملائیشیا سرمایہ کاری کانفرنس میں مختلف مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط ہوئے۔ ملائیشیا اور پاکستان میں آٹو موبائل، کمیونی کیشن اور فوڈ کے شعبوں میں اسی کروڑ سے زائد کے معاہدے طے پا گئے. ملائشیا کی پروٹون گاڑیاں اب پاکستان میں بھی بنیں گی۔ مہاتیر محمد نے وزیراعظم عمران خان کو گاڑی کی چابی بھی دی.
مہاتیر محمد نے یوم پاکستان کی مرکزی تقریب میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی جس سے ان کی پاکستان سے محبت کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے.

About Author

Comment here

Subscribers
Followers