قومی

نوازشریف کی طبی بنیادوں پر درخواست ضمانت منظور

نواز شریف کو طبی بنیادوں پر چھ ہفتوں کی عبوری ضمانت مل گئی. اپنی مرضی کے ڈاکٹر سے علاج کروا سکتے ہیں مگر بیرون ملک نہیں جا سکیں گے. سپریم کورٹ نے فیصلہ سنا دیا۔ پچاس لاکھ روپے کے دو اور دو شخصی ضمانت کے مچلکوں کے عوض ضمانت منظور کی گئی.
جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے درخواست ضمانت کی سماعت کی۔ خواجہ حارث نے ڈاکٹر لارنس سمیت مختلف میڈیکل بورڈ سے متعلق دلائل دیئے۔ چیف جسٹس نے ڈاکٹر لارنس کے خط پر سوال اٹھائے۔ جس پر خواجہ حارث کا مؤقف تھا پانچ میڈیکل بورڈز نے بھی نوازشریف کو ہسپتال منتقل کرنے کی سفارش کی۔ چیف جسٹس کا کہنا تھا نواز شریف نے سترہ سال معمول کے مطابق گزارے ہیں۔ ضمانت کے لیے میڈیکل گراؤنڈ تب ہی بنے گی جب انکی طبیعت زیادہ خراب ہو۔ عدالت نے دلائل سننے کے بعد چھ ہفتوں کی درخواست ضمانت منظور کر لی۔ نواز شریف طبی بنیادوں پر دوبارہ ضمانت کے لیے ہائیکورٹ سے رجوع کر سکیں گے.

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers