بین الاقوامیقومی

پاکستان نے پلوامہ واقعہ کے ابتدائی تحقیقاتی نتائج سے بھارت کو آگاہ کردیا

پاکستان نے پلوامہ واقعہ پر بھارتی رپورٹ کے تناظر میں ابتدائی تحقیقاتی نتائج سے نئی دہلی کو آگاہ کردیا. بھارت سے مزید شواہد طلب کرتے ہوئے یہ بھی کہا گیا ہے کہ کسی پاکستانی گروپ کا پلوامہ واقعہ سے تعلق ثابت نہیں ہوا۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق پلوامہ واقعہ پر بھارتی رپورٹ کا جائزہ لینے کے بعد پاکستان نے ابتدائی نتائج سے نئی دہلی کو آگاہ کردیا ہے۔ یہ جواب اسلام آباد میں سیکریٹری خارجہ نے بھارتی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ بلوا کر حوالے کیا۔
ترجمان خارجہ کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے پلوامہ واقعہ پر تحقیقات میں تعاون کی پیشکش کرتے ہوئے بھارت سے ٹھوس شواہد مانگے تھے۔ اس پر بھارت نے ایک دستاویز 27 فروری کو پاکستان کو دیا۔ پاکستان کا تمام تر عمل انتہائی ذمہ دارانہ اور مکمل تعاون پر مبنی رہا۔ یہ علاقائی امن اور استحکام کے مفاد میں کیا گیا۔
آپ نیوز کو موصولہ تفصیلات کے مطابق بھارت کو بتایا گیا ہے کہ کسی پاکستانی گروپ کا پلوامہ واقعہ سے تعلق ثابت نہیں ہوا. بھارت نے جو معلومات دیں وہ کسی بھی عدالت میں قانونی معاونت کے قابل نہیں. ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ اس عمل کو آگے لے جانے کیلئے پاکستان نے بھارت سے مزید شواہد اور معلومات بھی مانگی ہیں۔ بھارت مزید معلومات و شواہد دے تو پاکستان بھی اپنی ذمہ داریاں نبھا سکے گا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ حکومت پاکستان ان حالات میں بھی تعاون کرنے کیلئے تیار ہے.

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers