بین الاقوامی

ٹرمپ نے مسلم خاتون رکنِ کانگریس الہان عمر کا نائن الیون پر بیان متنازع بنا دیا

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے نیا تنازع کھڑا کر دیا. ڈیموکریٹک پارٹی کی مسلمان رکنِ کانگریس کے بیان کو سیاق و سباق کے بغیر استعمال کر کے لوگوں کو تشدد پر اکسایا. الہان عمر کی زندگی خطرے میں پڑ گئی۔
ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ٹویٹ میں صومالیہ نژاد امریکی مسلم خاتون الہان عمر اور نائن الیون کی ویڈیو کو یکجا کر کے پیش کیا، جس کے بعد الہان پر دہشتگردی سمیت کئی الزامات عائد کیے گئے. الہان عمر کی حمایت میں سینیٹر برنی سینڈرز، سپیکر نینسی پلوسی، ڈیموکریٹک ارکانِ کانگریس اور عام شہریوں نے ٹویٹس کیں۔ ان کا کہنا تھا کہ صدر ٹرمپ لوگوں کو الہان عمر کے خلاف تشدد پر ابھار رہے ہیں۔ سپیکر پلوسی نے صدر ٹرمپ پر زور دیا ہے کہ وہ اِس کلپ کو ہٹا دیں۔ الہان نے تئیس مارچ کو امریکی مسلمانوں سے خطاب کرتے ہوئے نائن الیون کو کچھ لوگوں کی جانب سے کیا گیا ایک واقعہ کہا تھا، جس پر صدر ٹرمپ نے کہا تھا کہ ‘نائن الیون اُنہیں یاد ہے’۔

Comment here

Subscribers
Followers