قومی

داتا دربا رکےباہر خودکش دھماکا

لاہور ایک بار پھر دہشت گردوں کے نشانے پر آگیا، داتا دربا رکےباہر خودکش دھماکے میں ایلیٹ فورس کےپانچ اہلکاروں سمیت آٹھ افراد شہید اور پچیس زخمی ہو گئے۔ تفصیل جانتے ہیں اس رپورٹ میں۔
دوسرے روزے کی صبح پونے نو بجے کے قریب داتا دربار کے گیٹ نمبر دو کے باہر خود کش حملہ کیا گیا۔ بتایا گیا ہے کہ حملہ آور نے ایلیٹ فورس کی گاڑی کو نشانہ بنایا۔ ڈی آئی جی آپریشنز لاہور کا کہنا ہے کہ دھماکہ ہائی سکیورٹی زون میں ہوا، اسی لئے وہاں ایلیٹ فورس کی گاڑی موجود تھی، جو حملے کی زد میں آکر بری طرح تباہ ہوگئی اور قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے۔ ڈی آئی جی آپریشنز موقع سے مبینہ خود کش حملہ آور کے اعضا بھی ملے ہیں ،دھماکے کی شدت دیکھتے ہوئے بتایا گیا کہ حملے میں آٹھ سے دس کلو گرام دھماکہ خیز مواد استعمال کیا گیا۔ آئی جی پنجاب عارف نواز خان نے میڈیا کو بتایا کہ دھماکے میں شہید ہونے والے افراد میں پانچ پولیس اہلکار ایک داتا دربار کا سکیورٹی گارڈ اور دو شہری شامل ہیں ۔ آئی جی پنجاب دھماکے کے زخمیوں اور لاشوں کو میو ہسپتال پہنچایا گیا، جہاں ایمر جنسی نافذ کر دی گئی، میو ہسپتال میں پچیس زخمی لائے گئے، جنہیں طبی امداد دی گئی۔ زخمی پولیس اور فرانزک ٹیموں نے موقع سے شواہد اکٹھے کر لئے ہیں۔ داتا دربار پر نصب سی سی ٹی وی کیمروں سے حاصل ہونے والی فوٹیج کی مدد سے تحقیقات شروع کر دی گئی ہے۔

Comment here

Subscribers
Followers