قومی

سابق ڈی جی آئی بی بریگیڈیئر (ر) امتیاز کی بریت کیخلاف نیب اپیل مسترد

سپریم کورٹ نے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں سابق ڈی جی آئی بی بریگیڈیئر (ر) امتیاز کی بریت کیخلاف نیب اپیل مسترد کردی. چیف جسٹس نے کہا آمدن اور زائد اثاثوں کی مالیت کا تعین کرنا نیب کی ذمہ داری ہے.
چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے آمدن سے زائد اثاثوں کے احتساب مقدمہ میں بریگیڈیئر ریٹائرڈ امتیاز کی بریت کیخلاف نیب کی اپیل پر فیصلہ سنایا۔ عدالت نے بریگیڈیئر امتیاز، عدنان خواجہ اور بیگم نسرین امتیاز کی بریت کیلئے ہائیکورٹ کا فیصلہ برقرار رکھا۔ چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا آمدن اور زائد اثاثوں کی مالیت کا تعین کرنا نیب کی ذمہ داری ہے۔
چیف جسٹس نے کہا سپریم کورٹ 2011ء میں طے کر چکی ہے کہ ایسی ذمہ داری نیب پر عائد ہوتی ہے۔ اس مقدمہ میں نیب نے زائد اثاثوں کا تعین نہ کر کے ذمہ داری پوری نہیں کی۔ بے نامی دار ثابت کرنے کیلئے آمدن سے زائد اثاثے ثابت کرنا بنیاد ہوتا ہے۔ جب پہلی بنیاد نہ ہو تو بے نامی ہونا جرم نہیں بنتا. چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا کہ اگر جائیدادیں غیر قانونی ذرائع آمدن سے بنائی ہیں تو نیب استغاثہ اسے ثابت کرے۔ عدالت نے ایسا ریکارڈ دیکھ کر ہی فیصلہ کرنا ہوتا ہے۔

About Author

Comment here

Subscribers
Followers