انٹرٹینمنٹقومی

معروف اداکارہ ذہین طاہرہ وفات پا گئیں

پاکستانی ڈراما انڈسٹری میں کام کرنے والی معروف اداکارہ ذہین طاہرہ بروز منگل ۷۳ سال کی عمر میں وفات پا گئیں – خاندانی زرائع کے مطابق ذہین طاہرہ پچھلے ۱۰-۱۲ دنوں سے بیمار تھیں اور ڈاکٹرز نے ان کو وینٹیلیٹر کا سہارہ دیا ہوا تھا-آج دل کا دورہ پڑنے سے وہ اس جہان فانی سے کوچ کر گئیں-60 کی دہائی میں پاکستان ریڈیو سے اپنے کیئرر کا آغاز کرنے والی ذہین طاہرہ نے ٹی وی انڈسٹری میں قدم رکھا تو پھر پیچھے مڑکر نہ دیکھا-انڈسٹری میں ان کے چاہنے والے ان کو طاہرہ آپا کہہ کے پکارا کرتے تھے – طاہرہ آپا نے ٦۰ کی دہائی سے ریڈیو کی بعد پھر ڈرامہ انڈسٹری میں قدم رکھا اور اپن فن کے زریعے ڈرامہ انڈسٹری کو لاتعداد مثالی پرفارمنسز سے نوازا-انھوں نے تقریبا ۷۰۰ سے زائد ڈراموں میں بطور مرکزی کردار کام کیا-

ان کے مشہور ڈراموں میں اروسہ، دستک، کہانیاں ، کالی آنکھیں، دیس پردیس، ماسی اور ملکہ،راستے ہیں دل کے، کیسی ہیں یہ دورریاں، شماں، دل دیا دہلیث اور آئینہ تجھ پر قربان شامل ہیں- ڈرامہ انڈسٹری کے لیے ان کی ان بے لوث خدمات کے سبب ۲۰۱۳ میں حکومت پاکستان کی جانب سے اس وقت کے صدر پاکستان آصف علی زرداری نے ان کو تمغہ امتیاز سے بھی نوازا- ان کی وفات سے قبل کوئی ۲ ہفتے پہلے بھی سوشل میڈیا پر ان کی وفات کی خبریں گردش کر رہیں تھیں جن کی بعد میں ان کے بیٹے اور رشتےداروں نے تردید کردی- ان کی وفات کی خبر سنتے ہی انڈسٹری میں ان کے تمام چاہنے والے ان کی یاد میں اکٹھا ہو گئے- ڈرامہ صنعت سے تٰعلق رکھنے والے آج ہر شخص کی آنکھ ان کی یاد اور سوگ میں اشکبار ہے- زہین طاہرہ نے اپنی زندگی کے ٦۰ سال پاکستان کی ڈرامہ صنعت کو دیے- ان کا آخری ڈرامہ ببن خالہ کی بیٹیاں تھا جو کہ ۲۰۱۸ میں نشر ہوا تھا- آج صبح دل کا دورہ پرنے سے وہ اپنے چاہنے والوں کو اس دنیا سے چھوڑ کر چلیں گئیں ۔ان کا نام ایک سنہرے باب کی صورت میں یاد رکھا جائیگا-

Comment here

Subscribers
Followers