بین الاقوامیکھیل

بھارت بمقابلہ نیوزی لینڈ

بھارت بمقابلہ نیوزی لینڈ میں کیویز نے بھارتی بلے بازوں کو چھٹی کا دودھ یاد دلا دیا- ٹاپ آرڈر میں روہت شرما، ویرات کوہلی، کے ایل راہول میں سے کوئی بھی تیز گیند بازوں کی سامنے ٹک نہ پایا، سب نے منہ دکھائی کی رسم ادا کی اور ڈریسنگ روم کی جانب واپس چلتے بنے- کیویز نے 18 رنز سے میدان مار لیا اور بھارت کے گھر واپسی کا ٹکٹ یقینی بنایا- اور خود کو ورلڈ کپ کی دوڑ میں بس ایک قدم کی دوری پہ لے گیا-
میچ کا آغاز نیوزی لینڈ نے پہلے ٹاس جیت کر بیٹنگ سے کیا اور ٹاپ آرڈر کے لڑکھڑانے کے بعد کپتان کین ولیمسن اور راس ٹیلرنے ڈوبتی کشتی کو سہارہ دے کر اس کو کنارے تک پہنچایا اور بارش کے باعث مشکل کنڈیشنز ہونے کے باوجود بھارت کو 240 رنز کا ہدف دیا- بارش ہونے کی باعث بھارت نے اپنی اننگز کا آغاز اگلے دن کیا تو ٹاپ آرڈر ریت کی دیوار ثابت ہوا اور کوئی بھی کھلاڑی نیوزی لینڈ کے تیز دراز باولرز کے سامنے نہ ٹک سکا- کیویزنے باولنگ میں نہایت نظم وظبط کا مظاہرہ کیا اور کسی بھی بلےباز کے وکٹ پہ قدم زیادہ دیر نہ چلنے دیے- بھارت کی جانب سے پنت، جاڈیجہ،اور دھونی نے تھوڑی مزاحمت دکھائی مگر وہ زیادہ دیر ہمت نہ دکھا سکے – ویرات کوہلی ، جاڈیجہ اور دھونی کی وکٹ میچ کا ٹرننگ پوائنٹ تھی-اس کے بعد کویز کی میچ پہ پکڑمظبوط ہوتی گئی اور بلاآخر 221 رنز پہ پوری بھارتی ٹیم ڈھیر ہو گئی- اس فتح کے ساتھ نیوزی لینڈ نے ورلڈ کپ کے فائنل میں جگہ بنا لی- اب اس کا فائنل میں بقابلہ آسٹریلیا یا انگلینڈ سے ہو گا۔ جبکہ بھارت نے شکست کے ساتھ واپسی کا ٹکٹ کٹوا لیا ہے- اس شکست کی وجہ سے بھارتی شائقین کافی افسردہ اور ٹیم پر برہم ہیں۔

Comment here

Subscribers
Followers