بین الاقوامیقومی

مقبوضہ کشمیر میں یکطرفہ اقدام سے نریندر مودی دنیا بھر میں رسوا

مقبوضہ کشمیر میں قتل و غارت گری پر نریندر مودی دنیا بھر میں رسوا۔ فرانسیسی صدر کا نریندر مودی کو پاکستان سے مذاکرات کا مشورہ۔ کہا دونوں ملک مل کر مسٔلہ کشمیر کا حل نکالیں۔ وزیراعظم عمران خان سے اس معاملے پر بات کروں گا۔

مقبوضہ کشمیر کو اندرونی معاملہ سمجھ کر اس کی حیثیت یکطرفہ بدلنے کا اقدام بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کی رسوائی کا سبب بننے لگا۔ نریندرمودی فرانس پہنچے توصدر میکرون نے بھی کشمیر کی صورتحال پر بات شروع کردی۔

بھارتی وزیراعظم کے دورہ فرانس پر نریند مودی نے فرانس کے صدر ایمائیونل میکرون سے ملاقات کی۔ ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور خطے کی صورت حال پر بھی بات چیت ہوئی۔ اس موقع پر فرانسیسی صدر ایمائیونل میکرون نے مسئلہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی پر تشویش کا اظہار کیا۔

ملاقات میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے صدر میکرون نے کہا کہ انہوں نے بھارتی وزیر اعظم پر زور دیا ہے کہ وہ پاکستان سے مذاکرات کریں اور پاکستان سے مل کرمسئلہ کشمیر کا حل تلاش کریں۔

فرانسیسی صدر میکرون نے مزید کہا کہ فرانس کشمیر میں بسنے والے عام شہریوں کے حقوق پر اپنی توجہ مرکوز رکھے گا۔ ایل او سی کے اطراف آبادی کے مفادات اور حقوق یقینی بنانا ہوں گے۔ حالات خراب کرنے سے پرہیز کیا جائے۔

ایمائیونل میکرون نے یہ بھی کہا کہ وہ آنے والے کچھ دنوں میں پاکستانی وزیراعظم عمران خان سے بھی بات کریں گے کہ کشمیر کے معاملے پر دو طرفہ بنیادوں پر بات ہونی چاہیے۔ خطے کے استحکام اور دہشت گردی کے خلاف جنگ کی پالیسی کی حمایت کرتے ہیں۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے مقبوضہ کشمیر کی صورت حال کے حوالے سے فرانسیسی وزیر خارجہ ژاں ایو لیدریاں سے فون پر رابطہ کیا تھا۔ جس میں مقبوضہ کشمیر میں بھارت کے اقدامات سے خطے میں امن کو پیش آنے والے خطرات سے فرانسیسی وزیر خارجہ کو آگاہ کیا گیا تھا۔

فرانسیسی وزیر خارجہ ژاں ایو لیدریاں نے مودی کے متوقع دورہ فرانس کے دوران بات چیت کا اشارہ بھی دیا تھا اور اس کے علاوہ دونوں وزرائے خارجہ نے باہمی مشاورت جاری رکھنے کا فیصلہ بھی کیا تھا۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers