قومی

شیخ رشید کی نومبر، دسمبر میں پاک بھارت جنگ کی پیش گوئی

پاکستان اور بھارت میں نومبر اور دسمبر میں جنگ چھڑ سکتی ہے۔ وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید کا انتباہ، کہتے ہیں کہ فاشسٹ مودی کی رکاوٹ پاکستان ہے۔ اقوام متحدہ سے زیادہ امیدیں نہیں رکھنی چاہیے۔ سلامتی کونسل سنجیدہ ہوتی تو اب تک رائے شماری ہو چکی ہوتی۔ ہمیں کشمیریوں کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر چلنا ہو گا۔

وفاقی وزیر برائے ریلوے شیخ رشید نے کہا کہ نومبر، دسمبر میں پاکستان اور بھارت کی جنگ ہوتے دیکھ رہا ہوں۔ اب کشمیر کی آخری جدوجہد کا وقت آگیا ہے۔ اب جنگ ہوئی تو آخری ہوگی۔ فاشسٹ مودی کی راہ میں رکاوٹ صرف پاکستان ہی ہے۔ مودی کو افغانستان اور دیگر ممالک جانے کے لیے کوئی رکاوٹ نہیں چاہیے۔

ہماری خوش قسمتی ہے کہ ہمارے ساتھ چین جیسا دوست کھڑا ہے۔ چین نے ہم سے دوستی پر کبھی سمجھوتا نہیں کیا۔ کل بھی چین کے جنرل کی آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات ہوئی ہے۔

رہنماء عوامی مسلم لیگ نے کہا کہ 23 دن سے ہٹلر اور خونخوار مودی کی وجہ سے کشمیر سے بارود کی بد بو آرہی ہے۔ مقبوضہ کشمیر کی قسمت کا فیصلہ وہاں کے نوجوانوں کی جدوجہد کرے گی۔ ہمیں کشمیریوں کےساتھ قدم سے قدم ملا کر چلنا ہے۔ ورنہ تاریخ ہمیں کبھی معاف نہیں کرے گی۔

قائداعظم کے حوالے سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بانیٔ پاکستان نے وقت سے پہلے ہی صورتحال کا اندازہ لگا لیا تھا اور مسلمان دشمن سوچ کو پہلے ہی بھانپ گئے تھے۔ مسلمان دشمن سوچ کو ذہن میں رکھ کر ہی قائداعظم نے الگ وطن کا مطالبہ کیا تھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ عرب ممالک میں سڑک والے ہمارے ساتھ ہیں لیکن پیڑول پمپ والے ہمارے ساتھ نہیں لیبیا، یمن، عراق کے بعد انہیں بھی عقل آ جائے گی۔ کشمیر میں جنگ ہوئی تو مشرق وسطیٰ کا سڑک کا مسلمان خاموش نہیں رہے گا۔

بولے کہ معیشیت مضبوط ہوگی تو خارجہ پالیسی مضبوط ہو گی۔ آنے والے وقت میں نوجوانوں کا کردار اہم دیکھ رہا ہوں۔ اس پاکستان کوہم نے لوٹا اور تباہ و برباد کیا ہے۔ پاکستان اور بھارت کے درمیان دس جنگیں ہوچکی ہیں یا ان کے قریب پہنچ کر واپس لوٹے ہیں لیکن میں اب پھر اکتوبر نومبر میں پاکستان اور بھارت میں جنگ ہوتی دیکھ رہا ہوں۔

ہمارے دفاعی اقتصادی مسائل ہیں لیکن 130 ملین ایسے نوجوان ہیں جو پاکستان اور اسلام پر مرتے ہیں۔ ہماری افواج نے جو تیاریاں کی اس کے فائنل راؤنڈ کا وقت آگیا ہے۔ مزید بولے کہ عمران خان کی کال پر جمعہ کے دن کو راولپنڈی میں واک کررہے ہیں، تمام کالجز، اسکول اور یونیورسٹیاں کشمیریوں کیلئے یک زبان ہیں۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers