Uncategorizedبین الاقوامی

مسٔلہ کشمیر اب یورپی یونین میں بھی زیر بحث آئے گا

مقبوضہ وادی میں بھارتی مظالم کا پردہ چاک کرنے کے لیے پاکستان نے ایک اور سفارتی کامیابی حاصل کر لی۔ سلامتی کونسل کے بعد اب مسٔلہ کشمیر یورپی یونین میں بھی زیر بحث آئے گا۔ تاریخ میں پہلی بار مسٔلہ کشمیر امریکی کانگریس میں بھی اٹھایا جائے گا۔

مسٔلہ کشمیر اب دنیا بھر میں اجاگر ہونے لگا۔ پاکستان نے سفارتی میدان میں ایک اور سنگ میل عبور کر لیا۔ دنیا بھر میں مسٔلہ کشمیر پہ آواز بلند، مسٔلہ اب یورپی یونین میں بھی پہنچ گیا۔ یورپی پارلیمنٹ کی خارجہ امور کمیٹی نے مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر رپورٹ طلب کر لی۔

یورپی یونین کے حوالے سے وزیر خارجہ نے آپ نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یورپ ہٹلر کے دور میں اس سب صورتحال سے گزر چکا ہے۔ اسی لیے کشمیر کے حوالے سے انہیں اپنا کردار ادا کرنا ہو گا۔

انہوں نے کہا کہ 1930 کی دہائی میں جس فاشسٹ سوچ کو دنیا پہ مسلط کیا گیا۔ آج کے دور میں بی جے پی کی حکومت اس کی آئینہ دار ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یورپ دیکھ رہا ہے کہ کس طرح کشمیر میں پیلٹ گن کے استعمال سے لوگوں کو نابینہ کیا جا رہا ہے۔ لوگوں کی آنکھ کی بینائی ان سے چھینی جا رہی ہے۔

لوگوں کا جو مستقبل ہے اس کو تاریک کیا جا رہا ہے۔ مجھے یقین ہے کہ یورپین پارلیمنٹ ہمیں مایوس نہیں کرے گی۔
یورپین پارلیمنٹ کی خارجہ امور کی کمیٹی کا اجلاس 2 ستمبر کو ہو گا۔ اجلاس میں ارکان پارلیمنٹ کو مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے آگاہ کیا جائے گا۔ وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر بھی اس اجلاس میں شریک ہونگے۔

امریکی کانگریس کے کردار کے حوالے سے ایک سوال پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بہت سے سینیٹرز اور کانگریسی ممبرز نے کشمیر کی بگڑتی صورتحال پر ٹویٹ کیا ہے۔ بھارت یو۔ایس کانگریس کے ساتھ فریب کر رہا ہے۔ اصل بات چھپا رہا ہے لیکن امید ہے کہ کانگریس کشمیر کے حوالے سے بہت جلد اہم فیصلے لے گی۔

کشمیر میں جاری مظالم پر امریکی کانگریس کو جلد اقدامات کرنے ہونگے۔ امید ہے کہ جنوبی ایشیاء میں انسانی حقوق کی صورتحال پر جلد سماعت ہو گی۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers