قومی

اے ٹی ایم توڑنے والا ملزم پولیس حراست میں چل بسا

اے ٹی ایم توڑنے والا ملزم پولیس حراست میں زندگی کی قید سے آزاد۔ صلاح الدین کی اچانک موت کی وجہ کیا؟ کیا روایتی طریقہ تفتیش جان لے گیا؟ کئی سوال اٹھ کھڑے ہوئے۔ پولیس کے مطابق دل کا دورہ پڑنے کا باعث موت ہوئی۔ اصل وجہ جاننے کے لیے پوسٹ مارٹم رپورٹ کا انتظار۔ ڈی پی او نے انکوائری کمیٹی بھی بنا دی۔

دو روز پہلے ملزم نے ملزم رحیم یار خان آیا تھا اور یہاں بھی جمعہ کو شاہی روڈ پر اے ٹی ایم لوٹنے کی کوشش کی تھی۔ لیکن لوگوں نے اس کو پکڑ کر اس کی پٹائی کی تھی اور پولیس کے حوالے کردیا تھا۔ اب دو روز بعد ملزم کی ہلاکت ایک معمہ بن گئی ہے کہ اس کی موت قدرتی دل کا دورہ پڑنے سے ہوئی یا کہانی کچھ اور ہے۔

پولیس کے مطابق گزشتہ روز ملزم صلاح الدین کی اچانک طبیعت خراب ہوئی اور حوالات میں عجیب حرکتیں کرنے لگا جس پر اسے اسپتال منتقل کیا گیا۔

ڈی پی او عمر سلامت نے واقعے کانوٹس لے کر تحقیقات کا حکم دے دیا ہے۔ تاہم پوسٹ مارٹم رپورٹ کا انتظار ہے۔
آپ کو بتاتے چلیں کہ ملزم کی فیصل آباد میں اے ٹی ایم مشین توڑنے والی سی سی ٹی وی فوٹیج سامنے آئی تھی۔ جب پولیس نے اسے پکڑا تو دو دن تک اس نے گونگا بننے کا ڈرامہ کیا تھا۔

پولیس کے مطابق ملزم کا کام اے ٹی ایم سے کارڈز چوری کر کے ایک گروہ کو دینا تھا۔ اس کے علاوہ اپنے لیے کارڈز سے پیسے نکلوانا اور اے ٹی ایم مشین سے پیسے چوری کرنا اس کا پیشہ تھا۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers