قومی

وزیراعظم عمران خان کا مظفرآباد میں جلسے کا اعلان

کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی۔ وزیراعظم عمران خان جمعہ کو جلسے سے خطاب کریں گے۔ ٹویٹر پیغام میں کہا کہ دنیا کو پیغام دوں گا کہ پاکستان کشمیریوں کے ساتھ کھڑا ہے۔وزیراعظم  نے کل کابینہ کی بیٹھک بھی بلا لی۔ کشمیر کی صرتحال پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس کے حوالے بات ہو گی۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر وزیراعظم عمران خان نے اپنے جاری کردہ پیغام میں کہا کہ غاصب بھارتی افواج کی جانب سے مقبوضہ جموں و کشمیر کے جاری محاصرے کے بارے میں دنیا کو پیغام بھجوانے اور اہل کشمیر کو یہ دکھانے کیلئے کہ پاکستان پوری ثابت قدمی سے ان کے ساتھ کھڑا ہے، میں 13 ستمبر بروز جمعۃ المبارک مظفر آباد میں بڑے عوامی اجتماع سے خطاب کروں گا۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے مظفر آباد جلسےکے حوالے سے پارٹی رہنماؤں سے مشاورت شروع کردی ہے۔ کارکنان اور دیگر عوام ریلیوں کی صورت میں جلسہ گا میں آئیں گے۔ اس موقع پر دلسہ گاہ مین سخت اقدامات کیے جائیں گے۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ وزیراعظم نے چند روز قبل کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے کشمیر آور منانے کا اعلان کیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ ہر ہفتے میں ایک دن پوری قوم، ہمارے سکولز، کالجز، یونیورسٹیز اور دفاتر اور کاروباری مراکز پر جانے والے افراد ایک آدھے گھنٹے کے لیے نکلیں گے اور کشمیریوں کے حق میں آواز اٹھائیں گے۔ جس سے متعلق آگاہ کیا جاتا رہے گا۔

دوسری جانب وزیراعظم نے کل وفاقی کابینہ کا اجلاس بھی طلب کر لیا ہے۔ اجلاس میں مسٔلہ کشمیر کے حوالے سے درپیش صورتحال، پارلیمانی اجلاس اور عالمی رہنماؤں سے رابطوں سے متعلق تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

کابینہ اجلاس میں پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے صدر پاکستان عارف علوی کے خطاب کے حوالے سے بھی حکمت عملیترترتیب دی جائے گی اور اس کے علاوہ کابینہ کی سی پیک منصوبہ میں کام کرنے والے چینی شہریوں کے وزٹ ویزا کو ورک ویزا میں تبدیل کرنے کی منظوری دینے کا بھی امکان ہے۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں رئیل اسٹیٹ آرڈیننس 2019 کی بھی کابینہ سے منظوری کا امکان ہے جبکہ کابینہ پاکستان ٹوبیکو بورڈ کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کی ازسر نو تشکیل کی منظوری بھی دے سکتی ہے۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers