بین الاقوامی

اب ایٹمی جنگ ہوئی تو نتائج خوفناک ہونگے: وزیراعظم عمران خان

وزیراعظم عمران خان کا کشمیریوں کے لیے ہر حد تک جانے کا اعلان۔ الجزیرہ ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ تقسیم کے وقت ہی مسٔلہ کشمیر حل ہو جانا چاہیے تھا۔ اب ایٹمی جنگ ہوئی تو نتائج خوفناک ہونگے۔

وزیراعظم عمران خان نے الجزیرہ ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ  اب اگر پاکستان اور بھارت میں روایتی جنگ ہوئی تو اختتام ایٹی جنگ ہوگا۔ جس کے نتائج خوفناک ہونگے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان جنگ کی شروعات نہیں کرے گا۔ میں جنگ کے خلاف ہوں۔ اگر کسی قوم کو دو باتوں ميں سے کسی ايک بات کو چننا ہو   کہ یا وہ ہتھيار ڈال دے يا آخری فوجی تک لڑے تو ميں جانتا ہوں پاکستان آخری دم تک لڑے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایٹمی جنگ سے بچنے کے لیے عالمی برادری کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔ ہم نے اقوام متحدہ میں بھی کشمیر کا معاملہ اٹھایا۔ بولے کہ وہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں مسٔلہ کشمیر کی صورتحال پر بات کریں گے۔ بھارت مقبوضہ وادی میں حکومتی ظلم و ستم سے توجہ ہٹانے کیلئے پاکستان پر دہشتگردی کا الزام لگا رہا ہے۔

کہا کہ ہو سکتا ہے کہ بھارت کشمیر میں اپنے اقدامات کے پیش نظر آنے والے ردعمل کا الزام پاکستان پر بھی لگائے۔ مسلمان مغربی ممالک ميں اسلام فوبیا کا شکار ہيں اور يقيناً ہندوستان ميں مسلمانوں کو تشدد کا نشانہ بنايا جارہا ہے اور جو کچھ کشمير ميں ہورہا ہے وہ بھی اس کا واضح اظہار ہے۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ کچھ روز قبل بھی وزیراعظم عمران خان نے روسی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا تھا کہ کوئی بھی ذی شعور شخص ایٹمی جنگ کی بات نہیں کرسکتا۔ دنیا کو پاک بھارت جنگ کا نقصان ان کی سوچ سے بھی بڑھ کر ہوگا۔ کشمیر کی تباہ کن صورتحال کے جنوب ایشیا سے بھی بہت دور تک اثرات مرتب ہوسکتے ہیں۔

جوہری ہتھیاروں کے حامل دو ملک آمنے سامنے ہیں۔ اگر پاک بھارت کشیدگی بڑھی تو تصور سے بالاتر نتائج نکلیں گے۔ اس سے بچنے کے لیے عالمی برداری کردار ادا کرے۔

 

 

 

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers