قومی

نیب سکھر کا خورشید شاہ کے گھر پہ چھاپہ

سکھر میں نیب کی جانب سے خورشید شاہ کے گھر تلاشی لی گئی ہے۔ نیب نے خورشید شاہ سمیت ان کے بیوی اور بچوں کے کمروں کی بھی تلاشی لی۔
نیب سکھر ٹیم کی جانب سے آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنماء خورشید شاہ کے گھر میں چھاپہ مارا گیا ہے۔

نیب سکھر کی خورشید شاہ کے گھر کی تلاشی

بریکنگ نیوز: نیب نے خورشید شاہ، ان کی بیگم اور بچوں کے کمروں کی تلاشی لی

Posted by Aap News on Tuesday, September 24, 2019

 

سول مجسٹریٹ کی موجودگی میں نیب کی 15رکنی ٹیم کی تلاشی لی۔ گھر کا مرکزی دروزہ بند کر کے گھر کے تمام کمروں کی تلاشی لی گئی ہے۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ پیپلز پارٹی کے قائد بلاول بھٹو بھی کچھ دیر تک خورشید شاہ کے گھر پہنچنے والے تھے۔ لیکن ان سے قبل ہی نیب سکھر کی ٹیم وہاں پہنچ گئی۔

نیب اہلکاروں کی جانب سے ایک ایک کمرے کی مکمل طور پر تلاشی لی جا رہی ہے۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ نیب نے خورشید شاہ کی چارج شیٹ میں سب سے پہلا مؤقف یہی اپنایہ تھا کہ پیپلز پارٹی رہنماء کا گھر جو کہ سکھر میں پروفیسرز کالونی میں واقع ہے ان کی آمدن سے مطابقت نہیں رکھتا۔

نیب اہلکاروں نے گھر کے ہر کمرے کی باقاعدہ پیمائش بھی کی۔ اس کے علاوہ گھر میں موجود تمام چیزوں کی جانچ پرتال بھی کی۔

ذرائع کے مطابق اس موقع پر خور شید شاہ کے بیٹے ایم پی اے سندھ اسمبلی فرخ شاہ اور خور شید شاہ کے بھتیجے وزیر ٹرانسپورٹ سندھ اویس قادر شاہ بھی نیب ٹیم کی تلاشی کے دوران گھر میں موجود تھے۔

ذرائع کے مطابق خورشید شاہ کے گھر سے کوئی چیز برآمد نہیں ہوئی اور نہ ہی نیب نے کوئی چیز ان کے گھر سے اٹھائی۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ چند روز قبل عدالت میں نیب کی جانب سے 7 روزہ راہداری ریمانڈ کی درخواست کی گئی تھی۔ مگر عدالت نے خورشید شاہ کا 2 روزہ راہداری ریمانڈ دے کر نیب کو انہیں فوری سکھر کی عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیا تھا۔

اس سے ایک روز قبل نیب سکھر نے خورشید شاہ کو اسلام آباد سے گرفتار کر لیا تھا۔ خورشید شاہ بنی گالہ میں اپنے دوست کے گھر موجود تھے۔

رہنماء پیپلز پارٹی اور سابق اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی خورشید شاہ پر غیر قانونی طور پر جائیدادیں اپنے نام کروانے، ہوٹل، پٹرول پمپ اور بنگلے اور اس طرح کی بے نامی جائیدادیں بنانے کا الزام ہے۔

آپ نیوز نے خورشید شاہ کی جائیدادوں کی تفصیل حاصل کر لی۔ خورشید شاہ اور ان کے خاندان کے مختلف شہروں میں 105 اکاؤنٹس ہیں۔ خورشید شاہ نے فرنٹ میین کے نام پر تراسی جائیدادیں بنا رکھی ہیں۔ خورشید شاہ پر 500 ارب روپے کی کرپشن کا الزام ہے۔

Comment here

instagram default popup image round
Follow Me
502k 100k 3 month ago
Share