قومی

چئیرمین نیب کی شہباز شریف کے خلاف ایک اور انکوائری کی منظوری

چئیرمین نیب کے زیر صدارت ایگزیکٹیو بورڈ کا اجلاس۔ 2 ریفرنسز اور 7 انکوائریوں کی منظوری۔ شہباز شریف کے خلاف اوقاف اراضی کی غیر قانونی الاٹمنٹ پر انکوائری ہو گی۔ ایڈن ہاؤسنگ اسکینڈل میں ڈاکٹر امجد کے خلاف ریفرنس دائر ہو گا۔ سابق ڈپٹی اسپیکر پنجاب اسمبلی شیر علی گورچانی کے خلاف تحقیقات ہونگی۔

نیب کے چئیرمین جسٹس (ر)جاوید اقبال کی زیر صدارت ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس ہوا۔ جس میں ڈپٹی چیئرمین، پراسیکیوٹر جنرل، آپریشنز اور پراسیکیوشن حکام نے شرکت کی۔

نیب نے سابق وزیراعلی پنجاب میاں شہباز شریف کی خلاف اوقاف اراضی کی غیر قانونی الاٹمنٹ کے الزام میں انکوائری شروع کرنے کی منظوری دیدی ہے۔

نیب اعلامیے کے مطابق ڈاکٹر امجد نے ہاؤسنگ سوسائٹی کے نام پر عوام سے 25 ارب روپے کا فراڈ کیا۔ ایڈن ہاؤسنگ اسکینڈل میں ان کے خلاف بھی انکوائری کی منظوری دے دی ہے۔

نیب نے 2 رفرنسز اور 7 انکوائریوں کی منظوری دی ہے۔ سابق ڈپٹی اسپیکر پنجاب اسمبلی شیر علی گورچانی کے خلاف بھی اوقاف اراضی کی غیر قانونی الاٹمنٹ پر انکوائری کی منظوری دی گئی ہے۔

اس کے علاوہ نیب بلوچستان نے سابق وزیراعلی بلوچستان اسلم رئیسانی کی خلاف ریفرنس کی سفارش کی تھی۔ چئیرمین نیب نے اسے بھی منظور کر لیا ہے۔ سابق ایم-این-اے سمیع الحسن گیلانی کے خلاف ٹیکس چوری کا کیس ایف بی آر کو بھیجنے کی بھی منظوری دے دی گئی ہے۔

اجلاس سے خطاب میں جسٹس (ر)جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ ہم بدعنوان عناصر سے لوٹی گئی رقم برآمد کرنے کے لیے کوشاں ہیں۔ بدعنوانی ایک ناسور ہے جو ملکی ترقی میں بڑی رکاوٹ ہے۔

22 ماہ میں 71 ارب کی رقم برآمد کرکے قومی خزانے میں جمع کروائی ہے۔ انکوائریز اور انویسٹی گیشنز وقت مقررہ پر انجام تک پہنچائی جائیں۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers