قومیکھیل

ہمیں صرف ایک کی بجائے 6 میچ جیتنے والے ڈھونڈنے کی ضرورت ہے: مصباح

پاکستان دنیا کی نمبر ون ٹی ٹونٹی ٹیم ہے لیکن سری لنکا کیخلاف پہلے دو ٹی ٹونٹی میچ بالترتیب 64 اور 35 رنz سے ہار گئی، جس نے سری لنکا کو لاہور میں تین میچوں کی سیریز میں دو صفر کی ناقابل شکست برتری دلا دی۔

دوسرے ٹی ٹونٹی میچ کے اختتام کے بعد پریس کانفرنس کے دوران پاکستان کے ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مصباح الحق نے ٹاپ آرڈر بیٹسمین بابر اعظم پر ٹیم کا زیادہ انحصار اور ٹیم میں میچ جتانے والے اور کھلاڑیوں کی کمی کے بارے میں بات کی۔

مصباح کا کہنا تھا کہ ہم ٹی ٹونٹی میں پہلے نمبر پر بن گئے لیکن اگر آپ غور کریں تو ہماری صرف طاقت بابر اعظم کی رنز تھی اور وہ دو کھیلوں میں اسکور نہیں کر پائے۔ مجھے لگتا ہے کہ ہمیں ایک نہیں بلکہ 6 میچ جیتنے والے ڈھونڈنے کی ضرورت ہے۔ مصباح نے کہا کہ جب تک آپ کے پاس مڈل آرڈر میں یہ پاور ہاؤس نہیں ہے اور پاور پلے کے لئے ٹاپ آرڈر میں پاور ہاؤس نہیں ہے، آپ اچھی کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کرسکتے۔ اسی طرح بولنگ پاور پلے میں اگر آپ وکٹیں حاصل نہیں کرسکتے اور پھر ڈیتھ اوور میں آپ اچھی طرح سے ختم نہیں ہو سکتے۔

دوسرے کھلاڑیوں کو تلاش کرنے کی ضرورت ہے، آپ کب تک ایک یا دو بیٹسمینوں پر بھروسہ کر سکتے ہیں؟ انہوں نے مزید کہا کہ ٹیم کے ساتھ پریشانیاں دیکھ رہے ہیں اور میں انہیں بھی دیکھ رہا ہوں۔ ہمیں ان کو حل کرنے کی ضرورت ہے۔ یہ ایسی کوئی چیز نہیں ہے جو راتوں رات طے کی جا سکتی ہے۔ ان چیزوں کو ٹھیک کرنے میں کچھ وقت لگتا ہے۔ ظاہر ہے کہ میں جوابدہ ہوں لیکن ٹیم بنانے کے لیے آپ کو وقت درکار ہے اور ایسا کرنے کے لیے آپ کچھ تجربات کرتے ہیں۔ تب ہی آپ کو اپنے سوالوں کے جواب ملیں گے۔ بہت ساری چیزیں ہمارے سامنے ہیں اور ہمیں حل تلاش کرنے کی ضرورت ہے۔

مصباح الحق نے سری لنکا کے خلاف ٹی ٹونٹی سیریز کے لئے منتخب اوپنر احمد شہزاد اور مڈل آرڈر بیٹسمین عمر اکمل کا بھی دفاع کیا۔ انہوں نے کہا کہ پی ایس ایل میں احمد شہزاد کی کارکردگی بہترین رہی۔ ڈومیسٹک کرکٹ میں تمام فارمیٹس میں عمر اکمل کی کارکردگی بہت اچھی رہی۔ بد قسمتی سے ہمارے پاس ٹی ٹونٹی میں ہمارے پاس کوئی دوسرا بیٹسمین نہیں ہے جس نے اس طرح کی پرفارمنس دی۔ انہوں نے کہا کہ مجھے لگتا ہے کہ جو بھی کھلاڑی ٹیم سے باہر ہے اگر وہ کارکردگی دکھاتا ہے تو اسے دوبارہ موقع ملنا چاہیے۔ ہم نے اس بنیاد پر وہ موقع دیا لیکن انہوں نے کارکردگی کا مظاہرہ نہیں کیا۔

پاکستان اور سری لنکا کے مابین تیسرا ٹی ٹونٹی میچ بدھ کے روز پاکستانی وقت کے مطابق شام 6:30 بجے قذافی اسٹیڈیم لاہور میں کھیلا جائے گا۔ تیسرے اور آخری ٹی ٹونٹی میچ میں پاکستانی کرکٹ ٹیم کے پاس صرف وائٹ واش سے بچنے کا موقع ہے۔ سری لنکا کو ابھی تک ٹی ٹونٹی سیریز میں 2-0 کی برتری حاصل ہے۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers