بین الاقوامی

رافیل جہاز پر مذہبی سیاست بھارتی وزیر دفاع کو مہنگی پڑ گئی

مودی حکومت کو فرانس سے خریدے گئے رافیل جہاز پر مذہبی سیاست مہنگی پڑ گئی۔ فرانس میں بھارتی وزیر دفاع کی توہم پرستی سے دنیا بھر میں بھارت کی جگ ہنسائی۔ سوشل میڈیا پر تجزیے اور تبصرے مودی حکومت کے سینے پر موم تلنے لگ گئے ہیں۔ موقع دیکھ کر بھارتی اپوزیشن پارٹی کانگریس نے بھی چڑھائی کر دی۔

جنگی جہاز پر مذہبی رنگ چڑھانے کی سیاست مودی حکومت کے گلے پڑگئی

جنگی جہاز پر مذہبی رنگ چڑھانے کی سیاست مودی حکومت کے گلے پڑگئی#BreakingNews #NewsReport #AapNews

Posted by Aap News on Wednesday, October 9, 2019

 

بھارتی وزیر دفاع راجناتھ سنگھ رافیل طیارے لینے فرانس پہنچ گئے۔ جہاں وہ جہاز پر کبھی سندور سے اوم کا نشان بنانے لگے تو کبھی جہاز کے ٹائروں کے نیچے لیموں رکھنے لگ گئے۔ اس کے علاوہ انہوں نے جہاز پر پھول، ناریل اور لڈو بھی چڑھائے۔

بھارتی وزیر دفاع کے اس چال چلن پر بھارتی اپوزیشن پارٹی کانگریس نے بھی انہیں آڑھے ہاتھوں لیا۔ کانگریس کے مطابق جہاز پر پوجا پاٹ کرنے سے انتہا پسند جماعت آر ایس ایس کا ایجنڈہ بے نقاب ہو گیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ وزیر دفاع کی جگہ ائیر چیف کو جہاز وصول کرنا چاہیے تھا۔

کانگریس نے یہ الزام بھی عائد کیا کہ مودی حکومت نے اربوں روپے کے جہاز خرید کر لمبا مال کمایا ہے۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ فرانس نے آج پہلا رافیل طیارہ بھارت کے حوالے کیا تو طیارہ بھارتی ائیر چیف وصول کرنے کے بجائے بھارتی وزیر دفاع راجناتھ سنگھ وصول کرنے کے بہانے مودی حکومت کی تشہیر کرنے چلے گئے۔

طیارہ وصول کرتے وقت جب راجناتھ سنگھ نے لیموں، اگربتی، لڈو، سندور اور ناریل منگوا کر پوجا پاٹ شروع کر دی تو فراسیسی حکام بھی یہ دیکھ کر دنگ رہ گئے۔

راجناتھ سنگھ کی اس حرکت سے ٹویٹر پر طوفان کھڑا ہو گیا۔ لوگوں نے وزیر دفاع کا مذاق اڑانا شروع کر دیا۔ کسی نے لکھا کہ یہ اربوں روپے کا جہاز بھارت کی حفاظت کیسے کرے گا جس کی اپنی حفاظت ایک لیموں کر رہا ہے۔

ایک صارف نے لیموں کے بارے میں لکھا کہ بھارتیوں نے جہاز روکنے کے لیے نئے سٹاپر ایجاد کر لیے ہیں۔ جبکہ ایک بھارتی صارف نے لکھا کہ اربوں روپے کے جہاز کا لیموں اور ناریل سے تحفظ ہوتے دیکھنا اس کی خوش قسمتی ہے۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers