قومی

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کراچی کی صفائی دیکھنے نکل پڑے

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ چھٹی کے دن کراچی کی صفائی دیکھنے نکل پڑے۔ مختلف علاقوں کا دورہ کیا، صفائی کے انتظامات کا جائزہ لیا۔ شہریوں سے مشکلات سنیں۔ متعلقہ حکام کو کام تیز کرنے کی ہدایت۔

اتوار کے دن وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے صوبائی وزیرسعید غنی اور مشیر مرتضی وہاب کے ہمراہ کراچی کے مختلف علاقوں میں صفائی کی صورت حال کا جائزہ لینے نکل پڑے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے آغاز صدر کے علاقے سے کیا۔ الیکٹرانک مارکیٹ میں کچرے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کمشنر کو کچرا پھینکنے والوں کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی۔

مراد علی شاہ نے ایس ایس پی ساؤتھ کو دکانداروں کو ایک مرتبہ پھر سے سمجھانے کی ہدایت بھی کی۔ ذرائع کے مطابق وزیر اعلی نے پوچھا کہ ڈسٹ بن کے باوجود دکاندار کچرا سڑکوں پر کيوں پھينک رہے ہيں؟ اسی طرح سڑک پر کچرا پھينکا جاتا رہا تو جرمانے عائد کرنا شروع کرديں۔

مراد علی شاہ نے کورنگی میں گندگی اور کچرے کے ڈھیر کو دیکھا تو کچرا کنڈیاں بنانے کا حکم دے دیا۔ جبکہ نالہ چوک کی صفائی کا حکم بھی صادر کیا۔

کورنگی پہنچے تو وہاں پھل فروشوں کو کوڑا نہ پھینکنے کی ہدایت کی۔ ذرائع کے مطابق ان کا کہنا تھا کہ شہری بھی تو شہر صاف رکھنے ميں تعاون کريں۔ شہری کچرا کنڈيوں ميں ہی کچرا پھينکيں۔ آپ کی اور آپ کے بچوں کی صحت کيلئے صفائی کر وارہا ہوں۔

ذرائع کے مطابق وزیر اعلیٰ بھینس کالونی پہنچے تو جیالے آپس میں لڑ پڑے۔ جس کی وجہ یہ تھی کہ پارٹی کے دو مختلف گروپس مراد علی شاہ کو اپنے علاقے لے کر جانا چاہتے تھے۔ اس سلسلے میں ایم این اے آغا رفیع اللہ اور پارٹی کے دیگر کارکنان میں تلخ کلامی بھی ہوئی۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ سندھ حکومت نے ستمبر میں صفائی مہم کا آغاز کیا تھا۔ اس سلسلے میں وزیراعلیٰ اکثر شہر کا دورہ کرتے اور لوگوں کے مسائل سنتے دکھائی دیتے ہیں۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers