بین الاقوامی

بڑے میدان میں بھارت کو شکست، پاکستانی پارلیمنٹیرینز نے میدان مار لیا

سفارتکاری کے میدان میں بھی پاکستان نے بھارت کو دھول چٹا دی۔ بھارت کی لاکھ کوششوں کے باوجود انٹر پارلیمانی یونین میں پاکستانی رکن منتخب ہوا۔

دنیا بھر کی 188 پارلیمان پر مشتمل انٹر پارلیمانی یونین کی 131 ویں جنرل اسمبلی کا اجلاس سربیا کے دارلحکومت بلغراد میں ہوا۔ اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی قیادت میں پاکستان کا پارلیمانی وفد انٹرپارلیمانی یونین کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کر رہا ہے۔

پاکستان کی پارلیمنٹ نے مجلس عامہ کے اس اہم عہدے کے لئے سینیٹر رضا ربانی کو نامزد کیا تھا۔ پاکستان نے مطالبہ کیا کہ خفیہ رائے شماری کرائی جائے۔

اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر بین الاقوامی پارلیمانی تنظیم آئی پی یو کی ایشیا پیسیفک گروپ کے موجودہ چیئرمین بھی ہیں۔ بھارتی وفد نے انتخابات موخر کروانے کی بھرپور کوشش کی۔

بھارت نے اپنی جانب سے ششی تھرور کا نام دیا تھا مگر جب اس نے دیکھا کہ باقی ممبران کی جانب سے موثٔر جواب نہیں مل رہا تو اس نے اپنے امیدوار کا نام واپس لینے میں ہی بھلائی سمجھی۔

یوں پاکستان کے امیدوار رضا ربانی بلا مقابلہ رکن منتخب ہو گئے۔  سینیٹر شیری رحمان کو کمیٹی برائے پائیدار ترقی، مالیات اور تجارت کا جبکہ جاوید عباسی کو ڈرافٹنگ کمیٹی کا رکن منتخب کر لیا گیا۔

ذرائع کے مطابق رضاربانی تین سال کیلئے انٹر پارلیمانی یونین کی مجلس عاملہ کے ممبر منتخب ہوگئے ہیں۔

 

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers