انٹرٹینمنٹبین الاقوامی

سنیما میں پہلی فلم دیکھنے کے لیے مجھے ٹیسٹ میں نقل کرنی پڑی: شاہ رخ خان

بالی ووڈ کے بادشاہ شاہ رخ خان نے حال ہی میں اپنے ایک انٹرویو میں بتایا کہ زندگی کی پہلی فلم سنیما میں دیکھنے کے لیے انہوں نے کلاس ٹیسٹ میں نقل کی۔

انہوں نے کہا کہ وہ بچپن میں ہندی میں بہت کمزور تھے اور ان کی والدہ نے انہیں اس بات کا لالچ دیا تھا کہ اگر وہ کلاس ٹیسٹ میں اچھے نمبر لیں گے تو وہ انہیں سنیما میں فلم دکھانے لے جائیں گی۔

انہوں نے بتایا کہ مالی حالات کمزور ہونے کی وجہ سے ہمارے لیے سنیما میں جا کر فلم دیکھنا بہت بڑی بات تھی، میں یہ موقع گنوانا نہیں چاہتا تھا اس لیے میں نے ٹیسٹ میں نکل کی تا کہ میں سنیما جا سکوں۔

اپنی نجی زندگی کے بارے میں مزید بتاتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ان کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ اپنا زیادہ سے زیادہ وقت اپنے بچوں کے ساتھ بِتائیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ان کے بچوں نے انہیں کافی شفقت مند، انسان دوست اور ایک اچھا انسان بنایا ہے۔

کہا کہ میں اپنی زندگی کا زیادہ وقت اپنے ماں باپ کے ساتھ نہیں گزار سکا،اس لیے میں اپنا سارا وقت بچوں کو دینا چاہتا ہوں تا کہ میرے بعد انہیں اس بات کا غم نہ ہو کہ وہ میرے ساتھ زیادہ وقت نہیں گزار سکے۔

اپنے مداحوں کے حوالے سے بات کرتے ہوئے بولا کہ میری خواہش ہے کہ میں اپنی زندگی میں اپنے تمام مداحوں سے مل سکوں۔ میں اپنے شرمیلے مزاج کی وجہ سے مداحوں کے سامنے ڈانس کرنے یا اداکاری کرنے سے کتراتا ہوں لیکن مجھے یہ سب ان کی خوشی کے لیے کرنا پڑتا ہے۔ اس سے مجھے محسوس ہوتا ہے کہ میں ان سے جڑا ہوا ہوں۔

انہوں نے اس بات کا انکشاف بھی کیا کہ فلم انڈسٹری کے شروعات کے دنوں میں ایک میگزین کے مصنف نے میرے بارے میں جھوٹ لکھا۔ میں غصے میں آ کے اس کے دفتر گیا اور اس سے کافی بدتمیزی اور اس کو مارنے کی دھمکی بھی دی اور اس جرم کی وجہ سے مجھے ایک دن حوالات میں بھی رہنا پڑا۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers