قومی

سموگ پر قابو پانے کے لیے جوڈیشل کمیشن نے بڑا فیصلہ کر لیا

ابرِ رحمت برسا تو فضا میں چھائی سموگ چھٹ گئی۔ 700 کی خطرناک حد تک پہنچنے والا ائیرکوالٹی انڈیکس 70 پر آ گیا۔ سموگ کے خاتمے اور ماحولیاتی آلودگی پر قابو پانے کے لیے جوڈیشل کمیشن نے بڑا فیصلہ کر لیا ہے۔

 

اب سے کوڑے کو آگ لگانے پر جرمانہ نہیں مقدمہ ہو گا۔ گزشتہ رات لاہور میں ائیر کوالٹی انڈیکس 450 کی خطرناک حد تک پہنچ گیا تھا جس کے باعث آج سکول بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔

گزشتہ رات فضائی آلودگی اور سموگ نے شہر میں ڈیرے ڈال رکھے تھے جس کے باعث پنجاب بھر کے تمام سرکاری اور پرائیوٹ اسکولز بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔

بھارت کی جانب سے چاول کی فصل کا فضلاء جلائے جانے کی وجہ سے سموگ لاہور میں داخل ہوا۔ اس بناء پر انوائرنمنٹ کمیشن کے چئیرمین جسٹس(ر) علی اکبر قریشی نے اہم فیصلے کیے ہیں۔

آج جو فیصلہ کیا گیا ہے اس کے مطابق جو بھی کوڑے کو آگ لگائے گا اس پر موقع پر ہی مقدمہ درج کر لیا جائے گا۔ اس کے ساتھ ساتھ کمرشل بلڈنگز اور رہائشی علاقوں میں جتنے بھی سی سی ٹی وی کیمرے ہیں ان کو ہدایت کر دی گئی ہے کہ  کوئی بھی کوڑے کا آگ لگائے اس کی فوری طور پر نشاندہی کی جائے یا کہ اس کے خلاف مکمل کارروائی ہو سکے۔

انوائرنمنٹ کمیشن کے چئیرمین نے سی ٹی او لاہور کو ہدایت جاری کی ہے کہ جو گاڑیاں زیادہ دھواں چھوڑتی ہیں ان کے خلاف آج سے ہی کارروائی شروع کر دی جائے۔ اس کے ساتھ ساتھ ان پر جرمانوں کی شرح بڑھانے کے لیے قانون سازی پر فوری طور پر عمل کرایا جائے۔

 

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers