بین الاقوامی

ڈونلڈ ٹرمپ کی ایران پر مزید پابندیوں کی دھمکی

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ایران پر مزید پابندیوں کی دھمکی۔ امن کی پیشکش بھی کر دی۔ کہتے ہیں کہ ایرانی حملے میں کوئی نقصان نہیں ہوا۔ مزید فوجی طاقت کا استعمال نہیں کرنا چاہتے۔ ارلی وارننگ سسٹم نے بہترین کام کیا۔ تمام فوجی سائرن بجتے ہی بنکر میں چلے گئے تھے۔ تہران کا ایٹمی ہتھیار تیار کرنے نہیں دیں گے۔

ایران کے حملے بعد امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ایرانی حکومت کے حملے میں کسی امریکی کونقصان نہیں ہوا۔
اس حملے میں امریکی فوجی محفوظ ہیں البتہ فوجی اڈے کو نقصان پہنچا۔ ارلی وارننگ سسٹم نے بہترین کام کیا۔ تمام فوجی سائرن بجتے ہی بنکر میں چلے گئے تھے۔

ایران پسپائی حاصل کر رہا ہے جو دنیا کے لیے اچھی بات ہے۔ جو امن چاہتا ہے امریکا اس کے ساتھ امن کے قیام کے لیے تیار ہے۔
پالیسی بیان دیتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ ایران کو جوہری ہتھیار تیار نہیں کرنے دیں گے۔ امریکی فوج کسی بھی چیز کیلئے تیار ہے۔ ایران اپنی ایٹمی سرگرمیاں روکے۔

ان کا کہنا تھا کہ ایران کو جوہری عزائم سے دستبردار ہونا پڑے گا۔ ایران تشدد پھیلاتا رہا تو خطے میں امن نہیں آسکتا۔
ایران کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ ایران مہذب دنیا کو خوفزدہ کرتا رہا ہے۔ امریکا اور دیگر قومیں ایران کا رویہ برداشت کرتی رہی ہیں۔ ایران نے یمن، لبنان، افغانستان اور عراق میں تباہی مچائی۔

اب معاملہ برداشت سے باہر ہوچکا تھا۔ امریکی افواج کسی بھی چیز کیلئے تیار ہیں۔ اس موقع پر امریکی صدر نے ایران پر مزید پابندیوں کا عندیہ بھی دیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم ایرانی حملے کے جواب میں مختلف آپشنز پر غور کر رہے ہیں تاہم امریکا فوری طور پر ایران پر مزید معاشی پابندیاں لگا رہا ہے۔
آپ کو بتاتے چلیں کہ 3 جنوری کو بغداد ایئر پورٹ پر امریکی راکٹ حملے میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی سمیت 8 افراد جاں بحق ہو گئے تھے۔

پینٹاگون کا کہنا تھا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے احکامات پر ایرانی جنرل کو نشانہ بنایا گیا۔ یہ کارروائی ایران کو مستقبل میں حملوں سے روکنے کے لیے کی گئی ہے۔

اس حوالے سے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ جنرل قاسم سلیمانی نے ہزاروں امریکیوں کو قتل اور زخمی کیا۔ قاسم سلیمانی مزید کئی امریکیوں کو مارنے کی منصوبہ کر رہے تھے۔ وہ براہ راست یا بلا واسطہ لاکھوں لوگوں کے قتل کا ذمہ دار تھے۔

ان کا مزید کہنا ہے کہ ایرانی کمانڈر قاسم سلیمانی کو جنگ شروع کرنے کیلئے نہیں بلکہ جنگ ختم کرنے کیلئے مارا ہے۔ ہم نے گزشتہ رات جو کیا وہ بہت پہلے ہی ہو جانا چاہیے تھا اور کئی انسانی جانیں محفوظ ہوتیں۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers