قومی

مسلم لیگ ن ووٹ کو عزت دو کے بیانیے پہ کھڑی ہے: رانا ثناءاللہ

مسلم لیگ ن ووٹ کو عزت دو کے بیانیے پہ کھڑی ہے۔ آرمی ایکٹ کی حمایت کر کے وزیراعظم آفس کو طاقت دی۔ لیگی رہنماؤں کی پریس کانفرنس۔ رانا ثناءاللہ نے کہا وزیراعظم ہاؤس کسی کی جاگیر نہیں۔ آج یہ ہیں تو کل کوئی اور ہو گا۔ ن لیگ کا ان ہاؤس تبدیلی لا کر متفقہ وزیراعظم لانے کا مطالبہ۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کے رہنماء رانا ثناءاللہ کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت کے پاس صرف 5 ووٹوں کی اکثریت ہے۔ حکومت کے خلاف ان ہاؤس تبدیلی بہت ہی آسان ہے۔ چاہتے ہیں ان ہاؤس تبدیلی ووٹ کے ذریعے آئے۔

ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن اب بھی ووٹ کوعزت دو کے بیانیے پرکھڑی ہے کیونکہ ووٹ کوعزت دو سے مراد عوامی رائے کا احترام کیا جائے لیکن آج ووٹ کہہ رہا ہے مجھے عزت دو۔

آرمی چیف کی توسیع پر ن لیگ سمیت کسی جماعت نے اعتراض نہیں کیا۔ قومی ادارے کو سیاست زدہ نہ کرنے کے لیے توسیع کی حمایت کا فیصلہ کیا۔ بس طریقہ کار پر اعتراض ہے۔

وزیراعظم ہاؤس سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم ہاؤس کسی کی جاگیر نہیں۔ چاہتے ہیں۔ سکون قبر میں ملتا ہے تو کیا پوری قوم کو قبر میں لٹانا چاہیے۔ مہنگائی کی وجہ سے سب پریشان ہیں۔ وزیراعظم ہاؤس میں آج یہ ہیں تو کل کوئی اور ہو گا۔ ووٹ کو عزت دو سے مراد عوامی رائے کا احترام کیا جائے۔

نواز شریف کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے 7 ارب روپے کے ضمانتی بانڈز نہیں دیے صرف 50 روپے کے اسٹامپ پیپر پر لکھا کہ واپس آؤں گا۔ اب حکومت اسٹامپ پیپپر کی نقل لے کر اس کا تعویز بنا کر گلے میں ڈال لے تا کہ انہیں سکون ملے۔

مزید کہا کہ حکومت 300 سے شروع ہوکرتین ہزار ارب تک پہنچ گئی تھی کہ نواز شریف نے اتنے لوٹ لیے ہیں۔ کہتے تھے نوازشریف سے پیسے لئے بغیر نہیں جانے دیں گے۔

بولے موجودہ حکومت کی غربت کے خاتمے کے لئے کوئی پالیسی نہیں ہے۔ حکومت کے پاس ایک ہی پالیسی ہے جو کہ صرف انتقام ہے۔ حکومت مخالفین کو انتقام کا نشانہ بنانا چاہتی ہے۔

اپنے کیس کے حوالے انہوں نے کہا کہ کہا گیا کہ مجھ سے 15 کلو ہیروئن برآمد ہوئی۔ انہوں نے 15 کلو ہیروئن اپنے گودام سے ڈالی ہے۔ تفتیشی افسر کی مجھ سے بات کرتے ہوئے فوٹیج دکھا دیں۔ جنہوں نے میرے ساتھ ظلم کیا ان پر اللہ کا قہر نازل ہو۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers