قومی

گلگت اورسکردو میں برفباری، پاک آرمی کا ریسکیو آپریشن جاری

گلگت میں شدید برفباری کے بعد بالائی علاقوں میں پاک آرمی کا ریسکیو آپریشن جاری ہے۔ نواحی گاؤں تھلی میں پاک فود کی امدادی ٹیموں نے کھانے پینے کا سامان پہنچا دیا ہے۔ مختلف حادثات میں زخمی ہونے والوں کو پاک آرمی کے ہیلی کاپٹرز کے ذریعے ہسپتال پہنچا دیا گیا ہے۔

آرمی کے زیرِ انتظام میڈیکل کیمپ بھی قائم کر دیا گیا ہے۔ سکردو اور گردونواح میں برفباری کا سلسلہ جاری ہے۔ شہر میں ڈھائی فٹ برف پڑنے سے نظامِ زندگی معطل ہو کر رہ گیا ہے۔

سکردو اور گردونواح میں 3 روز کی برفباری کے بعد برفباری کا سلسلہ قدرِ تھم گیا ہے۔ 3 روز میں شہر میں ڈھائی فٹ سے زائد برف پڑی ہے جبکہ بالائی اور پہاڑی علاقوں میں 5 سے 6 فٹ تک برف پڑی ہے۔

شدید برباری کی وجہ سے بلتستان ریجن کے دیگر اضلاع سے زمینی رابطہ مکمل طور پر منقطع ہو چکا ہے۔ پورے شہر میں انٹرنیٹ سروس جزوی طور پر معطل ہے۔

لینڈ لائن ٹیلیفون بھی کام نہیں کر رہے۔ ڈپٹی کمشنر سکردو ڈاکٹر انس اقبال کا کہنا تھا کہ سکردو رن وے کو کلئیر کرنے کے لیے دو دن سے ہیوی مشینری لگی ہوئی ہے تاہم ابھی تک پوری طرح رن وے کلئیر نہیں کیا جا سکا۔ جس کی وجہ سے فلائٹ آپریشن بھی تعطل کا شکار ہے۔

مقامی دفترِ موسمیات کا کہنا ہے کہ برفباری کا سلسلہ وہ 48 گھنٹے تک جاری رہے گا جبکہ میدانی علاقوں میں کہیں کہیں دھوپ نکل سکتی ہے۔

کراچی میں بھی سردی کی لہر برقرار ہے۔ آج کم سے کم درجہ حرارت 8.5 ڈگری ریکارڈ کیا گیا ہے۔ محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ شہر میں سردی کی شدت میں مزید اضافے کا امکان ہے۔ کراچی مین اب تک سائبیرئن ہواؤں کا راج ہے۔

Comment here

379,066Subscribers
8,414Followers