قومی

برطرف وزراء کی وزیراعلیٰ محمود خان سے صلح کی کوششیں شروع

خیبر پختونخوا کے برطرف وزراء کی وزیراعلیٰ محمود خان سے صلح کی کوششیں شروع کر دی گئی ہیں۔ پی ٹی آئی پنجاب کے رہنماؤں اور وفاقی قیادت نے وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا سابق سینئر وزیر کے درمیان مصالحت کیلئے رابطے شروع کر دیئے ہیں۔

پارٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ آج وزیر اعلیٰ محمود خان سے مصالحت کیلئے بات کی جائیگی۔

توقع کی جا رہی ہے کہ جلد عاطف خان اور وزیر اعلیٰ محمود خان کو آمنے سامنے بٹھا کر اختلافات طے کروائے جائیں گے۔ عاطف خان نے اس سلسلے میں اختیار وفاقی قیادت کو سونپ دیا۔

کل کے واقعے کے بعد جب تینوں وزراء کو فارغ کیا گیا تو یہی امید کی جا رہی تھی کہ عاطف خان میڈیا کے سامنے آ کر اپنا ردِعمل پیش کریں گے۔ پارٹی ذرائع کے مطابق صوبائی سطح کی ایک کمیٹی بنائی جا رہی ہے جس میں وزیرِ قانون سلطان محمد، وزیر برائے سوشل ویلفئیر خشام انعام اللہ اور دیگر ایم پی ایز شامل ہیں۔

کمیٹی آج ہی وزیرِ اعلیٰ محمود خان سے بھی ملاقات کریں گے۔ دونوں فریقین کو آمنے سامنے بٹھا کر کوشش کی جائے گی کہ معاملات طے ہو سکیں اور عاطف خان کو اپنے منصب پر واپس لایا جا سکے۔

اس حوالے سے وفاقی قیادت بھی کوشش کر رہی ہے کہ یہ معاملہ افہام و تفہیم سے حل ہو اور جب آمنے سامنے بٹھا کر معاملات طے ہو جائیں تو رپورٹ وزیراعظم عمران خان کو بھیجی جائے گی تا کہ یہ واپس اپنے عہدوں پر بحال ہو سکیں۔

اس سلسلے میں آج شام کو وزیرِ اعلیٰ محمود خان سے اسپیکر خیبر پختونخواہ ملاقات کریں گے۔ اسی طرح وفاق کے بھی دو نمائندے پشاور جا رہے ہیں وہ بھی وزیرِ اعلیٰ سے ملاقات کریں گے۔

Comment here

instagram default popup image round
Follow Me
502k 100k 3 month ago
Share