بین الاقوامی

بھارتی اداکار شتروگن سنہا بھی کشمیریوں کے حق میں بول پڑے

بھارت کے سابق اداکار اور کانگریس رہنما شتروگن سنہا مقبوضہ جموں کشمیر میں لگائی پابندیوں اور مظالم کے خلاف پھٹ پڑے۔ بولے کہ مودی سرکار نے کشمیر کو جیل میں بدل دیا ہے۔ کشمیر کی تمام سیاسی قیادت 6 ماہ سے قید ہے۔

مودی بھارتی سیاستدانوں کو کشمیر جانے نہیں دے رہا، جبکہ یورپی پارلیمنٹ کے متنازع اور انتہا پسند ارکان کو مقبوضہ وادی اس طرح لے کر گیا جیسے داماد کی سیوا کی جاتی ہے۔

اس کے باوجود یورپی یونین کی پارلیمنٹ میں کشمیر میں جاری مظالم پر کثیر حمایت سے قرارداد پیش ہوئی ہے۔

آپ کو بتاتے چلیں کہ 5 اگست کو راجیہ سبھا میں کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کا بل پیش کرنے سے پہلے ہی صدارتی حکم نامے کے ذریعے کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کردی تھی اور ساتھ ساتھ مقبوضہ کشمیر کو اپنی وفاقی حکومت کے زیرِ انتظام دو حصوں میں تقسیم کردیا تھا۔

اس کے ساتھ ہی مودی سرکار اور قابض بھارتی فوج نے وادی میں کرفیو لگا کر مکمل طور پر اسے جیل میں تبدیل کر دیا ہے۔

instagram default popup image round
Follow Me
502k 100k 3 month ago
Share