قومی

اسلام آباد ہائیکورٹ میں کرونا وائرس سے متعلق سماعت

Coronavirus Hearing Islamabad High Court

اسلام آباد ہائیکورٹ میں کرونا وائرس سے متعلق حکومتی اقدامات کے معاملے پر سماعت ہوئی۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے حکومتی نمائندوں سے اسفتسار کیا کہ پاکستان اپنے شہریوں کو چائنہ سے واپس کیوں نہیں لارہا؟ دیگر ممالک اپنے شہریوں کو چائنہ سے نکال رہے ہیں۔ پاکستان کیوں نہیں ایسا کر سکتا؟

Coronavirus Hearing Islamabad High Court

نمائندہ وزارتِ صحت نے کہا کہ کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کو الگ رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔ ویکیسن ابھی تک نہیں لائی گئی۔ حکومتی نمائندہ نے کہا 194 ممالک میں سے صرف 23 ممالک نے شہریوں کو نکالا ہے۔ چیف جسٹس نے پوچھا کہ 23 ممالک اپنے شہریوں کو محفوظ کرنے کے انتظامات کر سکتے ہیں تو پاکستان کیوں نہیں۔

نمائندہ وزارتِ خارجہ نے کہا کہ ووہان کو چینی حکومت نے لاک ڈاؤن کیا ہوا ہے۔ ووہان شہر میں ایک ہزار پاکستانی شہری ہیں۔ چینی وزیرِ خارجہ نے شاہ محمود قریشی کو یقین دہانی کرائی ہے کہ پاکستانیوں کا خیال رکھا جائے گا۔ چیف جسٹس نے کہا کہ یہ کوئی وضاحت نہیں کہ شہریوں کو نکالا تو کسی ملک سے تعلقات خراب ہو جائیں گے۔

instagram default popup image round
Follow Me
502k 100k 3 month ago
Share