پاکستان میں 10کروڑ افراد کے بینک اکائونٹ نہیں ہیں، ویلتھ پاک

اسلام آباد(آئی این پی )پاکستان میں 10کروڑ افراد کے بینک اکائونٹ نہیں ہیں ،راست اقدام کا پلیٹ فارم غیر مقبول ہو گیا،راست کو اپنانے میں دس سال لگ سکتے ہیں۔ویلتھ پاک کی رپورٹ کے مطابق اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی سنجیدہ کوششوں کے باوجودراست ادائیگی کا پلیٹ فارم عوام میں مقبول نہیں ہواہے۔ اس اقدام کا مقصد پورے ملک میں مالیاتی شمولیت اور بینکنگ ڈیجیٹائزیشن کو فروغ دینا ہے۔ راست پلیٹ فارم کے اس سست استعمال کے پیچھے مالیاتی خواندگی کی کم سطح، کم مالی شمولیت، رازداری اور سیکورٹی کے مسائل، ٹیکس سے بچنا اور معیشت کی رسمی دستاویزات شامل ہیں۔ پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف ڈویلپمنٹ اکنامکس اسلام آباد کے سینئر ریسرچ اکانومسٹ ڈاکٹر محمود خالد نے ویلتھ پاک کو بتایا کہ پاکستان میں مالیاتی خواندگی اور شمولیت کی شرح بہت کم ہے۔ اکثر پاکستانیوں کے پاس بینک اکاونٹس نہیں ہیں اور جن کے اکاونٹس ہیں ان میں سے زیادہ تر اپنی آمدنی نکالنے کیلئے انہیں ایک ہی لین دین کے لیے استعمال کرتے ہیں۔ وہ نقد رقم رکھتے ہیں اور نقد کا استعمال کرتے ہوئے لین دین کرتے ہیں۔ لوگ اپنے لین دین کے لیے اپنے بینک اکاونٹس کا استعمال کرنے میں ہچکچاتے ہیں کیونکہ 1,000 میں سے صرف 360 لوگ اپنی کمائی کمرشل بینکوں میں جمع کراتے ہیں۔ ورلڈ بینک کے مطابق پاکستان دنیا میں تیسرا سب سے بڑا غیر بینک شدہ بالغ آبادی رکھتا ہے۔ تقریبا 70 فیصدپاکستانی بالغوں کے پاس بینک اکاونٹس نہیں ہیں جن کی تعداد دس کروڑ بنتی ہے۔ غیر بینک شدہ پاکستانی خواتین آبادی کا 82 فیصد ہیں۔ مرکزی بینک پاکستان میں مالیاتی شمولیت کو بڑھانے کے لیے بہت بڑی رقم کی سرمایہ کاری کر رہا ہے، لیکن یہ اب تک مطلوبہ سطح تک نہیں پہنچ سکا۔ پاکستان میں لوگ آگاہی کی کمی اور خوف کی وجہ سے راست اور دیگر مالیاتی خدمات استعمال کرنے سے گریزاں ہیں، پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف ڈویلپمنٹ اکنامکس، اسلام آباد میں معاشیات کے پروفیسرڈاکٹر ابوالجلیل نے بتایاراست کا پہلا مرحلہ، جنوری 2021 میں شروع کیا گیا اور تنظیموں سے افراد کو بلک ادائیگیوں کو فعال کیا گیا۔ دوسرا مرحلہ راست کے تحت فرد سے فرد لین دین کی سہولت کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے۔ راست اقدام مارکیٹ میں دستیاب دیگر تمام ڈیجیٹل مالیاتی خدمات کے لیے ایک سہولت کار ہے، ڈاکٹر جلیل کے مطابق راست کو اپنانے میں پانچ سے 10 سال لگیں گے۔ یہ ڈیجیٹل معیشت کا حصہ ہے جو مقامی حالات کے مطابق ایک طویل مدتی رجحان ہے۔
متعلقہ خبریں