وقار یونس کو امید، آسٹریلیا کی پچوں سے ملے گی پاکستان کو زیادہ مدد

پاکستان کے سابق چیف کوچ وقار یونس نے کہا کہ آسٹریلیا کی پچیں عام طور پر بلے بازی کے لئے کافی اچھی ہوتی ہیں اور پاکستان کے پاس اچھے بلے باز ہیں، جو ان حالات میں کافی اچھا کھیل سکتے ہیں۔ آسٹریلیا کی میزبانی میں ٹی20 عالمی کپ اس سال اکتوبر-نومبر میں کھیلا جانا ہے۔

دبئی: عظیم تیز گیند باز وقار یونس نے آئندہ ٹی20 عالمی کپ (T20 World Cup-2022) کے لئے پاکستان کی حمایت کی ہے۔ انہوں نے منگل کو کہا کہ آسٹریلیا کی پچوں سے پاکستانی ٹیم کے بلے بازوں اور گیند بازوں کو مدد مل سکتی ہے۔ آسٹریلیا میں ٹی20 عالمی کپ اس سال اکتوبر-نومبر میں کھیلا جانا ہے۔ پاکستانی ٹیم کی کمان طوفانی بلے باز بابر اعظم کے پاس ہے۔

وقار یونس نے آئی سی سی ڈیجیٹل سے کہا، ’ہمارے (پاکستان) پاس عالمی کپ میں بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنے کا کافی اچھا موقع ہے‘۔ پاکستان کے سابق چیف کوچ کا ماننا ہے کہ آسٹریلیا کی پچوں سے ان کے بلے بازوں کو مدد ملے گی۔

انہوں نے مزید کہا، ’آسٹریلیا کی پچیں عام طور پر بلے بازی کے لئے کافی اچھی ہوتی ہیں اور پاکستان کے پاس اچھے بلے باز ہیں، جو ان حالات میں کافی اچھا کھیل سکتے ہیں‘۔ آئی سی سی مرد ٹی20 عالمی رینکنگ میں پاکستان دنیا کی تیسرے نمبر کی ٹیم ہے اور گزشتہ 12 ماہ میں اس نے کھیل کے سب سے چھوٹے فارمیٹ میں اچھے نتائج حاصل کئے ہیں۔

ٹیگز :
متعلقہ خبریں